98

قومی ٹیم کے سابق کپتان اور مایہ ناز آل راؤنڈر شاہد آفریدی نےریٹائرمنٹ واپس لینے کی تردید ….

قومی ٹیم کے سابق کپتان اور مایہ ناز آل راؤنڈر شاہد آفریدی نے پاکستان سپر لیگ کے تیسرے ایڈیشن میں مستقل اچھی کارکردگی کے باوجود دوبارہ قومی ٹیم کی نمائندگی کی قیاس آرائیوں کو مسترد کردیا ہے۔شاہد آفریدی نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میرا انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ واپس لینے کا کوئی ارادہ نہیں، میں صرف اپنے شائقین اور فاؤنڈیشن کی مدد کیلئے کھیل رہا ہوں۔پاکستان سپر لیگ کے حوالے سے سوال پر انہوں نے کہا کہ پی ایس ایل کے پہلے دو ایڈیشن بہت کامیاب رہے لیکن اس ایڈیشن میں شائقین زیادہ تعداد میں گراؤنڈ میں نہیں آ رہے لہٰذا میری ان سے درخواست ہے کہ اسٹیڈیم میں آ کر کھیل سے لطف اندوز ہوں۔اس موقع پر انہوں کراچی کنگز کے نوجوان قائد عماد وسیم کی قیادت کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ عماد وسیم تمام فیصلے اکیلے نہیں لیتے بلکہ سب کی مشاورت سے فیصلہ کرتے ہیں اور دو تین مرتبہ دباؤ میں ہونے کے باوجود بھی انہوں نے انتہائی اطمینان کا مظاہرہ کیا۔قومی ٹیم کے سابق کپتان نے موجودہ ایونٹ کے دوران کوئی ٹیلنٹ سامنے نہ آنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پی ایس ایل کا اصل مقصد باصلاحیت کھلاڑیوں کو اپنے ٹیلنٹ کے اظہار کا موقع دینا ہے جو پہلے ڈومیسٹک سطح پر عمدہ کارکردگی کے باوجود ایسا نہیں کر پاتے تھے لیکن ابھی تک مجھے کوئی خاص ٹیلنٹ نظر آیا نہیں آیا۔تاہم انہوں نے امید ظاہر کی کہ ایونٹ میں آگے چل کر شاداب خان، حسن علی اور فخر زمان جیسے باصلاحیت کھلاڑی نظر آئیں گے جو اپنی عمدہ کارکردگی سے قومی ٹیم میں جگہ بنائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں